پاکستانی نیشنل تراکی باز کوگولی مار دی گئی


تیئس سالہ محمد غلام مصطفےاوان جو کہ پاکستان کے نوجوان تراکی باز ہیں اور 2019سے گولڈ میڈلیسٹ ہیں ان کا تعلق راولپنڈی سے ہے رپورٹ کے مطابق آج صبح ان کی گھر سے تقرباً22فٹ کے فاصلہ پر ان کی لاش ملی جس کی شوٹ کیا گیا تھا۔

یہ بھی پرھیں:مری کے برفانی طوفان نے 7بہنوں سے اکلوتا بھائی بھی چین لیا۔

لاش کے ملتے ہی قریب پولیس سٹیشن کو مطلہ کیا گیااور لاش کو پولیس سٹیشن لایا گیا۔ ڈی ای جی ساجد کیانی کا کہنا ہے کہ انہوں نے اپنی ٹیم کو انفارمیشن اکھٹی کرنے کی ہدایات جاری کر دی ہیں ڈی ای جی کا کہنا ہے کہ پاسٹ مورٹم رپورٹ کی بعد مزید کچھ بتا یا جا سکتا ہے ۔


یاد رہے غلام مصطفے 2019میں پاکستانی آرمی کی طرف سے تراکی کےمقابلہ میں جیت چکے ہیں اور 3عدد گولڈ میڈلسٹ ہیں  

ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے